باچا خان صاحب کی برسی پر سائین رحمت کا باچا خان صاحب کی خدمت میں نذرانہ عقیدت
آو غفار کی باتیں کریں
تختتہء دار کی باتیں کریں
جو وفا دار تھا دل و جاں سے
ایسے غدار کی باتیں کریں
سرنگوں کر سکا نہ ظلم و ستم
ایسے سردار کی باتیں کریں
جس کو غم کھا گیا غریبوں کا
ایسے غمخوار کی باتیں کریں
الفت قوم جس کا ایماں تھا
ایسے دلدار کی باتیں کریں
صبر میں تھا جو پیروئے شبیر
ایسے حب دار کی باتیں کریں
فخر حریت و ناز آزادی
ایسے سالار کی باتیں کریں
مرتے دم جو حق کے ساتھ رہا
ایسے حقدار کی باتیں کریں
دنیا کیا کہتی ہے؟ بھول جا رحمت
آوو غفار کی باتیں کریں
سائین رحمت علی ناتھن شاھی